کیا منرل واٹر صحت کے لیے نقصان دہ ہے؟

پانی ہر جاندار کی بنیادی ضرورت ہے صاف اور شفاف پانی اچھی صحت کا ضامن ہے اسی لیے زمانہ قدیم میں بھی پانی گھروں میں ابال کر استعمال کیا جاتا تھا۔

 

گزرتے وقت کے ساتھ اب ابلے ہوئے پانی کی جگہ صاف پانی پینے کیلئے منرل واٹر کا استعمال کیا جاتا ہے، جسے اب ماہرین صحت نے کچھ وجوہات کی بنا پر مضر صحت قرار دیا ہے۔

 

تاہم ایک تحقیقی رپورٹ کے مطابق اب طبی ماہرین نے منرل واٹر استعمال کرنے والے صارفین کو خبردار کردیا ہے،ان کا کہنا ہے کہ پلاسٹک کی بوتلوں میں دستیاب یہ پانی انسانی صحت کے لئے ہر طرح سے مضر ہے۔

 

ایک تحقیق کے مطابق بعض منزل واٹر کمپنیاں خراب معیار کی پلاسٹک بوتلوں کا استعمال کرتی ہیں۔ ان پلاسٹکس کے مضرِ صحت اجزا پانی میں شامل ہوجاتے ہیں۔ تاہم

 

ایک تحقیق کے مطابق منرل واٹر کا استعمال انسانی جسم کو بیش بہا فوائد فراہم کرتا ہے۔

 

واضح رہے کہ فوڈ اینڈ ڈرگ اتھارٹی کے مطابق منرل واٹر میں پوٹاشیم، سوڈیم، کیلشیم، فاسفورس، میگنیشیم اور سلفر وغیرہ شامل کیا جاتا ہے۔ یہ معدنیات انسانی جسم میں ہڈیوں کو مضبوط رکھنے کے علاوہ بلڈ پریشر کو بھی مناسب رکھتی ہیں۔

 

ایک تحقیق کے مطابق منرل واٹر کا استعمال انسانی جسم کو بیش بہا فوائد فراہم کرتا ہے، منرل واٹر جہاں مفید ہے تو وہیں اس کی ناقص پیکجنگ انسانی صحت کیلئے بہت مضر ہے.

Comments

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے